Welcome!

اردو اسٹوری فورم پہ خوش آمدید فورم پر بہترین اردو سیکس کہانیاں پڑھنے کے لیے ابھی رجسٹر ہوجائیں

Register Now

Announcement

Collapse

اناؤنسمنٹ

وی آئی پی ممبرشپ کی معلومات کے لیے اس ای میل پہ رابطہ کریں
[email protected]
See more
See less

زینت ایک دیہاتی لڑکی

Collapse
X
 
  • Filter
  • Time
  • Show
Clear All
new posts

  • SexStory زینت ایک دیہاتی لڑکی


    میری بیگم کی شاپنگ کو آج ساتواں روز تھا اور ایک دن بعد وه میکے

    جانے والی تھی جہاں اس نے بیس دن رہنا تھا آج سے پندره دن بعد اس کی

    بہن کی شادی تھی اور اس کی امی یعنی میری ساس پچھلے کئی روز سے

    کال کر رہی تھی کہ میری بیڻی کو پہنچا دو اس کے بغیر کوئی کام نہیں ہو

    رہا ہے آج بدھ کا روز تھا اور بیگم نے جمعہ کے روز جانا تھا شام کے

    بعد میری زمینوں پر کام کرنے والے نعمت نے کال کی کہ صاحب میری

    امی کی طبیعت بہت خراب ہے اور ہم ڈاڻسن پر اس کو شہر کی ہسپتال میں

    لا رہے ہیں ہم آتے ہوئے آپ کی گلی سے گزر لیں گے اور میری بیگم آپ

    کے گھر رہے گی نعت میری زمینوں پر کام کرتا تھا اور میرے آبائی گاؤں

    سے ذرا فاصلے پر میری زمینوں پر بنے میرے مکان میں اپنی فیملی

    سمیت رہتا تھا اس سے پہلے وه اور اس کی امی رہتے تھے اس کا اپنا

    مکان نہیں تھا نعت کی عمر 18 سال تھی اور اس کی امی نے اپنی بیماری

    کو دیکھتے ہوئے نعت کی شادی تین ماه قبل اپنے کسی دوردراز کے رشتہ

    داروں میں کر دی تھی اس کی دلہن کا نام زینت تھا اس کی شادی کے

    سارے اخراجات بھی میں نے برداشت کئے تھے ان کی شادی بس نارمل

    سی تھی میرے ساتھ میری بیگم بھی اس کی شادی میں میرے ساتھ گئی

    تھی اور واپس آ کر بار بار کہہ رہے تھی لڑکی کی عمر بہت کم ہے زینت

    کی عمر پندره برس تھی اور نعت کی طرح وه بھی ایک غریب گھر کی

    لڑکی تھی کوئی دو گھنڻے بعد نعت لوگ آ گئے تھے اس کی امی کے حالت

    بہت خراب تھی زینت کو اس نے ہمارے گھر بھیج دیا میں نے نعت کو کچھ

    پیسے تھما دئیے اور ایک دوست ڈاکڻر کو کال کر کے ان کی ہلپ کا بول

    جاؤں گا میں گھر میں آیا تو زینت برقعہ اتار کر میری بیگم کے ساتھ بیڻھی تھی میں نے اسے

    پہلی بار دیکھا تھا کیونکہ اس کی شادی کے بعد زمینوں پر نہیں گیا تھا

    زینت کی رنگت قدرے سانولی تھی اس کا قد پانچ فٹ بوبز 32 سائز اور

    جسم نارمل تھا لیکن اس کی آنکھیں بہت پیاری تھی اور خالص دیہاتی

    لہجے میں وه بہت پیارے لہجے میں بولتی تھی اور اس کی آواز بھی بہت

    پیاری تھی ہسپتال میرے گھر سے ایک کلومیڻر سے بھی کم فاصلے پر تھا

    میری بیگم نے کھانا لگایا وه زینت کے لئے الگ سے کھانے کا ڈش تیار

    کر رہی تھی جسے میں نے منع کر دیا کہ وه ہمارے ساتھ کھانا کھائے گی

    کسی کو کم تر نہیں سمجھنا چاہیے کھانے کی ڻیبل پر زینت کچھ گھبرائی

    ہوئی تھی جس پر میں نے اس سے گفتگو شروع خر دی تاکہ اسغکا احساس

    کمتری دور ہو جائے رات دیر تک ہم اس سے باتیں کرتے رہے اور مجھ

    سے کافی مانوس ہو گئی گرمیوں کے دن تھے سو میری بیگم نے دوسرے

    کمرے کا اے سی بھی آن کر دیا اور زینت کو وہاں سلا دیا صبح میں ناشتہ

    لیکر ہسپتال چلا گیا نعت کی امی آئی سی یو وارڈ میں تھی میرا دوست

    ڈاکڻر عابد ان کی ہلپ کر رہا تھا ناشتہ میں نے نعت کے ساتھ کر لیا اور

    ہسپتال سے شہر میں اپنے کاموں کے لئے نکل گیا میں دن دو بجے گھر آیا

    تو زینت میری بیگم کے ساتھ گھرکے کاموں میں مصروف تھی دونوں نے

    نعت کی امی کا پوچھا اور میرے بتانے پر میری بیگم کچھ زیاده پریشان ہو

    گئی زینت کچن کی طرف گئی تو بیگم نے مجھے بولا اس مصیبت کو ڻال

    دو آج میں نے صبح ہر حال میں امی کے گھر جانا ہے میں نہیں رکوں گی

    میں بھی پریشان ہو گیا کہ اس کو کہاں بھیجوں گا یا نعت کو اس پریشانی

    کے وقت میں نئی ڻینشن کیوں دوں زینت کی امی کا گھر بہت دور تھا اور

    ان حالات میں نعمت کے لئے اسے امی کے گھر پہنچانا ممکن نہیں تھا سو

    اس نے ہمارے گھر پر اعتماد کیا تھا میں اپنے روم میں چلا گیا اور ڻی وی

    آن کرکے نیوز چینل لگا دیا۔
    (جاری ہے )

  • #2
    Acha Start hain.. Please Continue rakhan

    Comment


    • #3
      کمال کا ٹاپک لیا ہے آپ نے جناب۔ بہت اچھی کاوش ہے۔

      Comment


      • #4
        Achi story hai

        Comment


        • #5
          Naey unwan ke sath achhi shuruat he
          Gud start

          Comment


          • #6

            ڈوپٹہ اوڑھے کاموں میں مصروف زینت مجھے بہت سویٹ لگ رہی تھی وه ساده سے لباس میں تھی میری بیگم

            سونے چلی گئی اور زینت کو بھی اسچکے روم کا اے سی آن کر دیا کہ وه

            بھی سو جائے گرمیوں کے دنوں میں میں دن کے وقت نہیں سوتا تھا میں

            نے ذہن میں کل کےلئے ایک ترتیب بنا لی لیکن اس پر زینت کو راضی

            کرنا باقی تھا میں بیڈ روم سے موبائل کا چارجر لینے گیا تو میری بیگم نیند

            کےآغوش میں جا چکی تھی اب اس نے شام چھ بجے اڻھنا تھا میں اپنے

            روم میں آ گیا زینت میرے روم سے تین روم چھوڑ کر چوتھے روم میں

            تھی میں نے کمپیوڻر آن کیا تھا تو مجھے اپنے روم سے باہر کسی کے

            چلنے کی آواز سنی باہر نکل کر دیکھا تو کوئی نہیں تھا کچن میں جھانکا

            تو زینت فریج سے پانی کی بوتل نکال رہی تھی میں نے کہا کہ زینت

            مجھے بھی پانی پلا دینا وه ایک دم پیچھے مڑی اور پھر ہلکی مسکراہٹ

            کے ساتھ جی صاحب بول کر دوباره سے فریج کھولنے لگی میں اپنے روم

            میں چلا آیا زینت پانی کی بوتل اور گلاس لے۔کر میرے روم میں آ گئی

            گلاس میں پانی انڈیلا اور مجھے پیش کر دیا میں نے صوفے کی طرف

            اشاره کرتے ہوئے کہا زینت بیڻھو وه تھوڑی ہچکچائی دروازے کی طرف

            دیکھتے ہوئے بولی صاحب ایک بات کرنی تھی وه اس وقت قدرے

            گھبرائے ہوئی تھی میں نے اسے پھر صوفے پر بیڻھنے کا اشاره کیا تو وه

            دروازے کی طرف دیکھتی گھبرا کر بیڻھ گئی میں نے کہا بولو زینت کوئی

            مسئلہ ہے بولی نعت کو بولا تھا میرا کہ لے جائے مجھے میں نے نو میں

            سر ہلایا اور پوچھا کیوں جہاں اچھا نہیں لگ رہا میرے گھر میں بولی نہیں

            صاحب مجھے تو بہت اچھا لگ رہا ہے اور میں نعت سے آپ کی تعریفیں

            سن کر خواہش رکھتی تھی اور نعت کو بھی کئی بار بولا کہ مجھے صاحب

            کے گھر لے جاؤ کبھی ۔۔۔میں نے کہا تو پھر میں کیوں بولوں گا کہ زینت

            کو میرے گھر سے لے جاؤ ۔۔۔۔ بولی بیگم صاحبہ نے کل میکے جانا ہے

            ناں ۔۔۔۔۔۔ میں بات سمجھ چکا تھا بولا اگر بیگم میکے چلی جائے تو کیا تم P a ge | 4

            اس گھر میں نہیں ره سکو گی ۔۔۔بیگم صاحبہ نے بولا شام تک چلی جاؤ

            میں نے صبح جلدی جانا ہے ۔۔۔۔ زینت کیا تمھیں مجھ سے ڈر لگتا میں

            مسکرا رہا تھا بولی نہیں صاحب آپ سے بالکل نہیں لیکن اب بیگم سے ڈر

            لگنے لگا وه کچھ عجیب سی باتیں کر رہی تھی ۔۔۔میں نے زینت کی ران پر

            تھپکی دے کر بولا تم میرے ساتھ رہو گی نعمت کو اس حال میں کچھ نہیں

            کہتے ران پر مےرا ہاتھ لگتے وه سمت کر بیڻھ گئی تھی اور سر جھکا کر

            عجیب کیفیت میں چلی گئی تھی میں نے کہا زینت رہو گی ناں میرے ساتھ

            وه سرجھکائے خاموش بیڻھی تھی میں نے ایک بار پھر اس کی ران کو

            زور سے پکڑا اور اپنطرف کھینچنا چاہا وه ساکت بیڻھی تھی میں نے اس

            کو کل کا پورا پلان سمجھا دیا اور جیب سے مین گیٹ کی چابی بھی دے

            دی شام کو میں بازار چلا گیا اور دو سوٹ لے آیا جو میں نے بیگم کو

            دئیے کہ یہ زینت کو دے دینا صبح نعت آ کر اسے لے جائے گا وه پہلی بار

            ہمارے گھر آئی ہے تو خالی ہاتھ نہ جائے بیگم مطمئن ہو گئی اور صبح

            بیگم نے مجھ معمول سے بہت پہلے جگا دیا تھا اس کی تیاری مکمل ھو

            گئی تھی زینت نے بھی اس کے سامنے اپنے کپڑوں کا شاپر تیار کر لیا اب

            زینت مجھے مسکرا کے دیکھت،اور شرم سے سر جھکا لیتی جب میری

            بیگم پوری طرح تیار ہو گئی تو بولی۔نعت کو کال کرو میں نے نعمت کو

            کال کرکے اس کی امی کی خیریت پوچھ رہا تھا بیگم روم میں کچھ اڻھانے

            چلی گئی میں کال کاٹ کر بھی فون کان سے لگائے ہوئے تھا اور زور

            سے بولنے لگا کہ بس جلدی آ جاؤ ہم نکلنے لگے ہیں پھر موبائل فون کو

            پینٹ کی جیب میں رکھا زینت نے برقعہ پہن لیا تھا وه سفید ڻوپی وا برقعہ

            پہنتی تھی میں نے گیٹ سے گاڑی باہر نکالی اور گیٹ۔کو دوباره بند کر دیا

            میں گلی سے گزرتے ایک پڑوسی سے مختصر سا حال احوال کرنے کے

            گیٹ کی طرف آیا میں نے گیٹ کے پاس کھڑے ہو کر زینت کو اشاره کیا
            (جاری ہے )

            Comment


            • #7
              اس کہانی کو دوبارہ پڑھ کر مزا آرہا ہے

              Comment


              • #8
                اک بہترین کہانی

                Comment


                • #9
                  Kamaal read ki hoi story but nice

                  Comment


                  • #10
                    اچھی سٹوری لگی۔ اپڈیت جلدی دیجیے گا

                    Comment

                    Users currently viewing this topic; (0 members and 2 guests)
                    Users currently viewing this topic
                    0
                    Members

                    Working...
                    X